پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل سردار مرتضیٰ علی احمد آزاد امیدوار کی حیثیت سے کاغذات نامزدگی جمع کروا دیے

عباسپور (نمائندہ خصوصی) پاکستان تحریک انصاف آزادکشمیرکے مرکزی ڈپٹی جنرل سیکرٹری سردارمرتضی علی احمد نے آج ریٹرنگ آفیس میں آزادامیدوار کی حثیت سے اپنے کاغذات جمع کروادیئے بعد ازں ایک بڑے جلو س کی شکل میں پی ٹی آئی کے کارکنو ں کے ہمراہ عباسپور ریسٹ ہاوس میں ایک ہنگامی اورپرہجوم پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاکہ پارٹی نے پرانے نظریاتی ساتھیوں کونظرانداز کیا اورمیرٹ کاقتل عام کیا میری جنگ برادری ازم،علاقائی تعصب،سے ہے برادری ازم کی سیاست اب یہاں نہیں ہوگی جس کی بناء پر میں نے اپنے حلقہ انتخاب سے آزادامیدوار کی حثیت سے الیکشن لڑنے کافیصلہ کیا ہے اورحلقہ نمبر1 میں میرامقابلہ پاکستان پیپلزپارٹی سے ہوگا اورانشاء اللہ تعالی نچلے حلقے کی چاریونین کونسلزسے میں بھاری اکثریت سے ووٹ لونگا۔جب سیاسی ہاتھوں میں براوقت آتاہے لوگ بھاگ کر دوسری جماعتوں میں چھلانگیں لگانا شروع کردیتے۔انہوں نے کہاکہ پارٹی نے سردارعبدالقیوم خان نیازی کوپی ٹی آئی کاٹکٹ دیکر سیاسی قتل کیا ہے جہنوں نے حلقہ نمبرا کی عوام کاہمیشہ استحصال کیا حلقہ نمبرا میں کہیں مرتبہ باریاں لگاکر ممبراسمبلی بنے چوہدری محمدیاسین گلشن وزیر حکومت،سردارعبدالقیوم خان نیازی دونوں نے برادری ازم کی بنیاد پر باریاں لگاکر کرپشن کی حدکردی ہے حلقہ نمبرا میں تعمیر وترقی کے نام پر اپنے گھروں کوبھرا ہے سڑکیں کھنڈرات کامنظرپیش کررہی ہیں ان کامزید کہناتھا کہ میں نے وزیراعظم پاکستان عمران خان کے نظریے کی پاسداری کی ہے عمران خان کے ساتھ مشکل وقت میں بھی ساتھ رہا ہوں اورآئندہ بھی میں انکے خلاف کسی قسم کی بات نہیں کرونگا افسوس کامقام ہے کہ آج سیاسی ٹھک میدان میں اترآئے ہیں پی ٹی آئی کے منشور کا جن کوعلم ہی نہیں ایسے آدمی کوٹکٹ دینے کے بعدلوگوں کا حلقہ نمبرا ایل اے 18 پونچھ میں شدید رد عمل سامنے آرہا ہے ان کوپیسوں کی بنیاد پر ٹکٹ دیاگیاہے انشاء اللہ تعالی 25 جولائی کو آزادامیدوارکی حثیت سے میں بھاری اکثریت سے کامیاب ہونگا حلقہ نمبر1 عباسپور کی عوام الیکشن مہم کے دوران میرے حق میں فیصلہ دے چکے ہیں 25 جولائی کورسمی کاروائی ہوگی میں پی ٹی آئی کے منشورپرکام کرونگا پارلیمانی بورڈ نے حقائق سے بے خبرہوکر پیسیوں کی بنیاد پر عبدالقیوم خان نیازی کوٹکٹ دیا ہے جماعتی لوگ میرے ساتھ ہیں ان کاجماعت سے کوئی تعلق نہیں میں آج بھی وزیراعظم پاکستان عمران خان،وزیرامورکشمیر علی امین گنڈاپور،سیف اللہ خان نیازی،اورسردارتنویرالیاس کی دل سے قدرکرتاہوں انہیں بے خبررکھ کر ٹکٹ کافیصلہ کیا جس کو پی ٹی آئی کے کارکنوں نے مستردکردیامجھے ایجسٹ کرنے کی آفرآئی تھی ایسی ایجسمنٹ کو میں لعنت بھیجتا ہوں جس میں کارکنوں کاخیال نہ رکھا جائے اگر مجھے وزیراعظم بھی بنادیاجائے میں ایسی آفرکوکھبی قبول نہیں کرونگا جس طرح مچھلی پانی کے بغیر زندہ نہیں رہ سکتی اسی طرح سیاست میں عوام کے بغیر زندہ نہیں رہ سکتا۔پی ٹی آئی کے ورکر میری ذمہ داری ہے انکومیں کسی حال میں تنہانہیں چھوڑونگا۔جس کیلئے نوجوانوں نے محنت کی میرے ساتھ عوام کی بھاری اکثریت موجود ہے میں حلقہ کی عوام کا شکرگزار ہوں جہنوں نے مشکل وقت میں میراساتھ دیا سردارمرتضی علی احمد نے اپنے منشورکااعلان کرتے ہوئے کہاکہ ٹوٹی،کھمبے کی سیاست کو دفن کرکے اسمبلی میں جاکر قانون سازی کرینگے جس میں عوامی مشکلات کاازالہ ہوگا۔آزادکشمیر میں مختلف محکمہ جات کے اندر بڑے بڑے پروجیکٹ لائینگے جس سے آزادکشمیر میں خوشحالی آئے گی برادری ازم اورجہالت کو جڑ سے اکھاڑپھینکے گے پریس کانفرنس میں گھمیر،بٹل،منڈھول،سہڑہ،مدارپور اوربیڑی گلی سے عوام نے کثیرتعداد میں شرکت کی

اپنا تبصرہ بھیجیں