دو خاندانوں کی سیاست سے عوام تنگ آ چکے، حویلی میں بنیادی سہولیات ناپید۔عامر نذیر

تیسرا آپشن نہ ہونے کے باعث ووٹر دونوں خاندانوں کے شر سے بچنے کیلئے مجبوراً ووٹ دیتے تھے۔


دو خاندانوں کی سیاست سے عوام تنگ آ چکے،
حویلی میں بنیادی سہولیات ناپید۔عامر نذیر

تیسرا آپشن ہو تو ووٹر کو بھی فیصلہ کرنے میں آسانی ہوتی ہے۔

اسلام آباد(انٹرویو: علی حسنین نقوی،عکاسی پرویز مغل )پاکستان تحریک انصاف آزاد کشمیر کے جوائنٹ سیکرٹری و امیدوار اسمبلی حلقہ ایل اے 17 حویلی عامر نذیر چوہدری نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی کے پلیٹ فارم سے سیاست کا آغاز عوام کے بنیادی مسائل کو دیکھ کر کیا۔روایتی سیاست اور دو جماعتوں اور گھرانوں کی سیاست بنیادی مسائل کی سب سے بڑی وجہ ہے،برادری ازم کی سیاست کے کلچر میں عوام بے شمار مسائل میں دھنس چکے ہیں،برادری ازم ایک ایسا نا سور ہے کہ جو مسائل اور پسماندگی کی بڑی وجہ ہے۔صحت اور تعلیم کی بنیادی سہولیات نہ ہونے کے برابر ہیں۔گزشتہ دور حکومت پیپلز پارٹی کا تھا اور وزیر برقیات کا تعلق حویلی سے تھا مگر بد قسمتی سے ابھی تک حویلی کے اکثر علاقوں میں اب بھی بجلی کے مسائل ہیں جبکہ موجودہ دور میں وزیر تعمیرات کا تعلق حویلی سے مگر آزاد کشمیر کے دیگر حلقوں کی نسبت اب بھی حویلی میں سڑکوں کی حالت انتہائی خراب ہے۔تعمیرو ترقی کا کوئی بھی مخالف نہیں۔ڈیویلپمنٹ برائے گڈ گورننس کی ہر سطح پر حمایت کریں گے مگر ڈیویلپمنٹ برائے کرپشن کو ہر گز کھلی چھٹی نہیں دی جا سکتی۔موجودہ دور میں اربوں روپے کرپشن ہوئی جلد با ضابطہ ثبوتوں کے ساتھ ان چیزوں کو بے نقاب کریں گے۔ہم نے اجتماعات اور میڈیا کے ذریعے بارہا بہت سی چیزوں کی نشاندہی کی ہے آئندہ بھی عوامی حقوق کی بات سرعام کریں گے۔سیاست میں آنے کا مقصد عوامی خدمت ہے اور حویلی کے عوام نے اعتماد کیا تو بلا تخصیص عوامی خدمت کریں گے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے روزنامہ کشمیر ٹائمز سے خصوصی گفتگو کے دوران کیا۔انہوں نے کہا کہ میں عمران خان کے ویژن کو دیکھ کر پی ٹی آئی میں شامل ہوا ۔ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ بدقسمتی سے پاکستان اور آزاد کشمیر میں دو جماعتوں نے سیاست کی اور اسی طرح حویلی سمیت آزاد کشمیر کے دیگر حلقوں میں بھی دو خاندان ہی سیاست میں رہے یہی وجہ ہے کہ برادری ازم کی سیاست پروان چڑھی،ان کا کہنا تھا کہ اس میں کوئی شبہ نہیں کہ برادری کی اہمیت ہمیشہ ہوتی ہے مگر جب ایک لمبے عرصے تک کسی شخص کو آزما لیا جا چکا ہو اور پھر تیسرا آپشن ہو تو ووٹر بھی سوچ سمجھ کر ہی فیصلہ کر تا ہے۔حویلی کی پسماندگی سب کے سامنے ہے جن دو خاندانوں نے حکمرانی کی انہوں نے عوام کو تمام بنیادی سہولیات سے محروم رکھا۔انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ کئی ووٹر تو شر سے بچنے کیلئے مجبورا ان لوگوں کو ووٹ کرتے رہے ہیں ان کے پاس کوئی تیسرا آپشن نہیں تھا۔میری سیاست کا مقصد عوامی خدمت ہے اور برادری سمیت تمام دیگر برادریوں کی بلا تخصیص خدمت کروں گا۔انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ ترجیحات تو اس وقت سیٹ کی جاتی ہیں جب چند ایک مسائل آپ کے سامنے ہوں حویلی میں بد قسمتی سے دو خاندانوں کی سیاست کے درمیان عوام تمام تر بنیادی سہولیات سے محروم ہیں،عوام نے اگر اعتماد کیا تو انشاء اللہ تمام بنیادی مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے کیلئے دن رات کام کریں گے اور عمران خان کے ویژن کے مطابق اپنے حلقے سے تعمیر و ترقی کا سفر شروع کر کے عوام کو ہر طرح کی ریلیف فراہم کریں گے تاکہ عام شہریوں کی زندگی آسان بنائی جا سکے۔انہوں نے کہا کہ ہر سطح پر کرپشن کے نظام کی حوصلہ شکنی کریں گے اور میرٹ اور انصا ف کے قیام کیلئے ہر ممکن جدوجہد کریں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں